ہر وہ چیز جو ہماری ضرورت سے زیادہ ہو ” زہر“ بن جاتی ہے

ایک مرید کے سوالات اور مولانا روم کے جوابات!!

ایک مرید نے مولانا رُوم سے 5 سوال پوچھے، مولانا روم کے جواب غور طلب ہیں :

سوال 1 : زہر کِسے کہتے ہیں؟

جواب : ہر وہ چیز جو ہماری ضرورت سے زیادہ ہو ” زہر“ بن جاتی ہے- خواہ وہ قوت ہو یا اقتدار، بھوک ہویا لالچ، سُستی ہو یا کاہلی، عزم و ہِمت ہو یا نفرت یا کچھ اور-

سوال 2 : خوف کس شئے کا نام ہے؟

جواب : غیرمتوقع صورتِ حال کو قبول نہ کرنے کا نام خوف ہے- اگر ہم غیر متوقع کو قبول کر لیں تو وہ ایک مُہِم جُوئی میں تبدیل ہو جاتا ہے-

سوال 3 : حَسَد کِسے کہتے ہیں؟

جواب : دوسروں میں خیر و خُوبی تسلیم نہ کرنے کا نام حَسَد ہے ۔ اگر اِس خوبی کو تسلیم کر لیں تو یہ رَشک اور کشَف یعنی حوصلہ افزائی بن کر ہمارے اندر آگے بڑھنے کا جذبہ پیدا کرتی ہیں-

سوال 4 : غُصہ کس بلا کا نام ہے؟

جواب : جو امر ہمارے قابو سے باہر ہو جائے- اسے تسلیم نہ کرنے کا نام غُصہ ہے- اگر کوئی تسلیم کر لے کہ یہ امر اُس کے قابو سے باہر ہے تو غصہ کی جگہ عَفو، درگذر اور تحَمّل لے لیتے ہیں-

سوال 5 : نفرت کسے کہتے ہیں؟

جواب : کسی شخص کو جیسا وہ ہے تسلیم نہ کرنے کا نام نفرت ہے- اگر ہم غیر مشروط طور پر اُسے تسلیم کر لیں تو یہ محبت میں تبدیل ہو سکتا ہے.

(ماخوذ)

خاکپائےنقشبندو اولیا۶

کیٹاگری میں : Urdu

اپنا تبصرہ بھیجیں